Urdu

آسمان کیوں نہین گرا ؟ بھائی اور بہن گھر میں کیسے رہ رہے تھے ؟ ماں کے انکشاف نے دنیا کو ہلا کر رکھ دیا ، پولیس حرکت میں آ گئی

غربی دنیا سے تو متنازعہ اور شرمناک رشتوں کی خبریں وقتاََ فوقتاََ سامنے آتی رہتی ہیں لیکن صد افسوس ،صد استغفار کہ ایک عرب ملک میں ایشیائی بہن بھائی نہ صرف شرمناک بندھن میں بندھ گئے بلکہ قانونی اور دستاویزی طور پر شادی بھی رچا لی ۔اماراتی میڈیاکے مطا بق ابوظہبی کی ایک عدالت نے ایک ایشیائی بھائی اور اس کی سوتیلی بہن کو آپس میں شادی کرنے کا جرم ثابت ہونے پر چھ برس کی قید کی سزا سنا دی ہے ، ان بہن بھائی پر جعل سازی سے دستاویزات بدلنے کا بھی الزام ہے ۔

صد شرمناک بات یہ ہے کہ پولیس نے ان کی ماں کی شکایت پر بہن بھائی کو گرفتار کیا ۔بعد ازاں ماں نے عدالت کو بھی بیان ریکارڈ کروایا کہ میرا بیٹا اور بیٹی ابوظہبی میں بطور میاں بیوی رہ رہے ہیں ۔اخبار ڈیلی الاتحاد کا کہنا ہے کہ ماں اس وقت اپنے بیٹے اور بیٹی کے درمیان شادی شدہ زندگی کا پول کھولنے پر مجبور ہو گئی جب اسے اس کے بیٹے نے گھر سے نکال دیا ۔ایمریٹس 24/7کے مطابق اپیلوں کی سماعت کے دوران ان بہن بھائی نے آپس میں شادی شدہ تعلق ہونے کے الزام کی تردید کی ہے ۔ بد بخت بھائی نے فیصلے کیخلاف اپیل دائر کرتے ہوئے عدالت کو بتایا ہے کہ اس کے اور اس کی بہن کے درمیان کوئی معاشقہ یامحبت نہیں ۔ اپیل میں کہا گیا کہ اس نے اپنی بہن سے یو اے ای سے باہر ایشین ملک میں شادی کی تاکہ اسے یہاں لا سکوں۔

جب میں نے ساتھی اداکاروں کے سامنے یہ کام کیا تو انہو ں نے میرا مذاق اڑانا شرو ع کر دیا پھر میں نے ۔۔۔“ سنی لیون نے ایسی حقیقت سے پردہ اٹھا دیا کہ ہر کوئی دنگ رہ گیابالی ووڈ کی بے باک اداکارہ سنی لیون کا کہنا ہے کہ جب فلم کی شوٹنگ نہیں ہوتی اور وہ فارغ ہوتی ہیں تو اس دوران کپڑے بُننے اور پینٹنگ کو ترجیح دیتی ہیں۔بھارتی میڈیا کے مطابق سنی لیون نے کا کہناتھا کہ کہ اداکاری کے علاوہ انہیں پینٹنگز اور کپڑے

ب±ننے کا بے حد شوق ہے اور بنائی تو انہیں اتنی پسند ہے کہ وہ جب بھی فارغ ہوتی ہیں چاہے سیٹ پر ہوں یا گھر پر یہی کام کرتی ہیں۔ البتہ سنی لیون نے بتایا کہ اب انہوں نے ساتھی اداکاروں اور لوگوں کے سامنے بنائی کرنا بند کردیا ہے کیوں کہ ان کا مذاق اڑایا جاتا ہے۔سنی لیون کے مطابق ایک بار وہ اپنے ساتھی اداکاروں کے ساتھ فلائٹ میں تھیں اور کچھ ب±نائی کررہی تھیں کہ اچانک اداکاروں نے ان کا مذاق اڑانا شروع کردیا جس پر انہیں شرمندگی محسوس ہوئیاور انہوں نے فیصلہ کیا کہ آئندہ وہ کسی کے سامنے بنائی نہیں کریں گی۔خوبرو اداکارہ نے کہا کہ انہیں پینٹگنز کا بھی بہت شوق ہے اور ان کے تخلیق کردہ بعض فن پارے امریکا میں ان کے گھر کی زینت بھی بنے ہوئے ہیں۔

جن مردوں کا گروپ ’اے‘، ’بی‘ یا ’اے بی‘ ہے ان میں مردانہ کمزوری ’او‘ گروپ والے مردوں کی نسبت حیران کن طور پر 4گنا زیادہ ہوتی ہے۔“رپورٹ کے مطابق دنیا میں آدھے سے زیادہ مردوں کے بلڈگروپ اے، بی یا اے بی ہوتے ہیں جبکہ 44فیصد کا ’او‘ ہوتا ہے۔ شاید یہی وجہ ہے کہ مردوں کی اکثریت جنسی کمزوری کا شکارہوتی ہے۔ اوردو یونیورسٹی کے سائنسدانوں نے اپنی اس تحقیق میں 350مردوں پر تجربات کیے ہیں جن کی عمریں 50سے 60سال کے درمیان تھیں۔ انہوں نے شرکاءکو دو گروپوں میں تقسیم کیا، ایک وہ جنہیں کمزوری کا مسئلہ تھا

جبکہ دوسرے گروپ میں صحت مندلوگوں کو رکھا گیا۔ پھر ان کے خون کے نمونے لے کر ان کا گروپ چیک کیا گیا۔نتائج میں معلوم ہوا کہ جو مرد کمزوری کے مسائل کا شکار تھے ان میں واضح اکثریت کا گروپ اے، بی یا اے بی تھا جبکہ او گروپ والوں میں صرف 16فیصد اس مسئلے کا شکار تھے۔سائنسدانوں کا کہنا ہے کہ ”اس تحقیق سے یہ معلوم نہیں ہو سکا کہ کس عمر میں خون کا گروپ مردوں کی جنسی صلاحیت پر اثرانداز ہونا شروع ہوتا ہے۔ اس کے لیے مزید تحقیق کی ضرورت ہے۔“

بھنڈی ہر گھرمیں استعمال ہونےوالی مرغوب غذا ہے۔بھنڈی میں صحت سے متعلق کئی راز چھپے ہیں، بھنڈی میں بھرپورمقدار میں فائبرپایا جاتا ہے جو بلڈ شوگر کو کنٹرول کرتا ہے، اس میں کیلشیم پایا جاتا ہے جو ہڈیوں کو مضبوط بناتا ہے اور جوڑوں کے درد میں آرام پہنچاتا ہے، اس میں موجود لیس دار مادہ ہڈیوں کے لئے بہت مفیدہوتا ہے،بھنڈی میں وٹامن سی بھی بڑی مقدار میں پایا جاتا ہے، جو دمہ کی علامات کو پنپنے سےروکتا ہےبھنڈی کے استعمال سے گردے بھی ہر قسم کی بیماری سے محفوظ رہتے ہیں.اس کا پانی آپ کاکولیسٹرول بھی کنٹرول رکھتا ہے. بھنڈی کے پانی سے شوگر کو کنڑول کرنے کے لئے درج ذیل ٹوٹکہ اپنائیں. تازہ بھنڈیاں 4 عدد لے کر اس کا اوپری اور نچلا حصہ کاٹ دیں. بھنڈی پر چھوٹے کٹ لگادیں اور ان بھنڈیوں کو رات بھر پانی میں بھگو دیں۔صبح اٹھنے کے بعد ناشتے سے 30 منٹ پہلے بھنڈی کا پانی پی لیں. اس سے آپ کی شوگر بالکل کنٹرول ہوجائے گی۔

رپورٹ کے مطابق سائنسدانوں نے اس تحقیق میں 184ایسے مردوں پر تجربات کیے جن کی عمراوسطاً48سال تھی اور وہ اس مرض کا شکار تھے۔ انہیں دو گروپوں میں تقسیم کرکے سائنسدانوں نے ایک گروپ کو 6ہفتے تک روزانہ اسپرین کی ایک گولی کھلائی جبکہ دوسرے گروپ کو ڈمی گولی دی جاتی رہی(ڈمی گولی سائنسی تجربات میں دوا کے نفسیاتی اثرات کو برابر کرنے کے لیے دی جاتی ہے۔ اس سے دوسرے گروپ کے لوگوں کو بھی یہ احساس رہتا ہے کہ وہ بھی گولی کھا رہے ہیں لیکن گولی کا کوئی منفی یا مثبت اثر نہیں ہوتا۔)

چھ ہفتے بعد ماہرین نے دوبارہ ان کے مرض کے ٹیسٹ کیے تو حیران کن نتائج سامنے آئے۔ ڈمی گولی کھانے والوں کو کوئی فرق نہیں پڑا تھا جبکہ جو لوگ روزانہ اسپرین کی گولی کھا رہے تھے ان کا 50سے 88.3فیصد تک مرض ختم ہو گیا تھا۔ جنسی تقویت کی گولی ’ویاگرا‘ کھانے سے یہ شرح 48سے 81فیصد ہوتی ہے۔ چنانچہ اس تحقیق میں اسپرین کے نتائج ویاگرا سے بھی بہترسامنے آئے۔تحقیقاتی ٹیم کے سربراہ ڈاکٹر زیکی بیراکتر کا کہنا تھا کہ ”بعض لوگوں کے خون میں موجود پلیٹ لیٹس بہت بڑے ہوتے ہیں جو دوران خون میں رکاوٹ بنتے ہیں۔ اسپرین کی گولی ان سمیت دوران خون میں رکاوٹ کی دیگر وجوہات کو دور کر دیتی ہے جس کے نتیجے میں مردوں کا یہ جنسی مسئلہ حل ہو جاتا ہے۔“

Comments

comments

آسمان کیوں نہین گرا ؟ بھائی اور بہن گھر میں کیسے رہ رہے تھے ؟ ماں کے انکشاف نے دنیا کو ہلا کر رکھ دیا ، پولیس حرکت میں آ گئی
Click to comment

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

To Top