Urdu

جسم کے اس حصۓ پر کبھی بھی پرفیوم نہیں لگانا چاہئے

خوشبو شاید واحد چیز ہے جو مرد و عورت کو یکساں پسند ہوتی ہے ۔ خاص کر گرمیوں میں اس کا استعمال ضرور کرنا چاہئے تا کہ پسینے کی بدبو کو ختم کیا جاسکے ۔  لیکن کیا آپکو علم ہے کہ پرفیوم لگانا خطرناک بھی ہو سکتا ہے ۔  جی ہاں گرمیوں میں مخصوص جگہ ہوتی ہے اگر اس پر پرفیوم لگایا جائے تو وہ فائدہ کے بجائے نقصان دہ ہوتا ہے ۔ ماہر جلد شانیل روزا

کہتی ہیں کہ اگر آپ گردن پر پرفیوم چھڑک کر دھوپ میں نکل جاتے ہیں تو اس پر براہ راست دھوپ پڑنے کی صورت میں ’پوئیکیلو ڈرما آف سیواٹ‘ نامی جلدی بیماری پیدا ہو سکتی ہے۔ یہ بیماری جلد پر دھبوں کی صورت میں نمودار ہوتی ہے، جن میں کھجلی، درد اور شدید جلن ہوتی ہے۔ یہ دھبے دراصل جلد میں خون کی شریانوں کے پھٹنے کی وجہ سے پیدا ہوتے ہیں

اور ان کے نشان ایک مدت تک باقی رہتے ہیں۔اس لئے خوشبو ضرور لگائیں لیکن احتیاط کریں کہ کہیں لینے کے دینے نہ پڑ جائییں اور خوشبو کے  بجائے کوئی تکلیف دہ بیماری نہ ہوجائے

Comments

comments

جسم کے اس حصۓ پر کبھی بھی پرفیوم نہیں لگانا چاہئے
Click to comment

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

To Top