Urdu

قوم کی بیٹیاں رل گئی ۔ صحافی۔ چلو تسی وی رل جاؤ ۔ خادم رضوی

پچھلے سال اسلام آباد دھرنوں کی ضد میں رہا جس میں مشہور دھرنا بابا خادم رضوی کا تھا جو خود کو بریلوی طبقہ کا نمائندہ کہتے ہیں لیکن ان کے جید اور سمجھدار علماء کا کہنا ہے کہ ان کا کوئی تعلق ہی نہیں۔ اس دھرنے کی وجہ وہ متنازع ختم نبوت قانون تھا جو کہ قومی اسمبلی میں زید حامد کی سربراہی میں پیش کیا گیا جس پر سب سے پہلے اعتراض جے یو

آئی کے حافظ صاحب نے کیا اور اس کے بعد جماعت اسلامی نے اسے اٹھایا جس کے بعد مخلتف مکاتب فکر کے جید علماء نے لوگوں میں شعوری مہم چلائی ۔لیکن خادم رجوی اور ان کے گروپ نے اس موقع کو کیش کیا اور کوب شہرت کمائی اس دھرنے میں بہت سے لوگ شہید بھی ہوئے عوامی مقامات پر تھوڑ پوڑ کی گئی اور لوگوں کو ہراساں بھی کیا گیا ۔ اس دھرنے میں جو

سب سے زیادہ بات مشہور ہوئی وہ خادم رضوی کی گالیاں تھیں جس کے لئے انہوں نے آیات اور احادیث کو تھوڑ مروڑ کر اپنے حق میں پیش کیا اور اطلاع کے مطابق یہ دھرنا حکومت کو 65 کروڑ روپے اور کئی جانوں کی ضیاع کی قیمت میں پڑا ۔ جس کے بعد خادم رضوی اپنا بوریہ اٹھا کر چل دئے ۔ ان کا ایک رپورٹر نے انٹریو لیا ۔، جس کے ساتھ خادم رضوی نے کیا سلوک کیا دیکھیں اس رپورٹ میں

Comments

comments

قوم کی بیٹیاں رل گئی ۔ صحافی۔ چلو تسی وی رل جاؤ ۔ خادم رضوی
Click to comment

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

To Top