Urdu

پنجاب پولیس کی بر بریت کا ایک نیا شکار ایک معذور جوان اور اس کی ماں کے ساتھ پنجاب پولیس نے کیا کر ڈالا

پنجاب پولیس کی ایک نئی بربریت اور درندگی پر مشتمل خبر ۔ پنجاب پولیس نے پہلے معذور نوجوان کو لاک اپ میں بند کیا اور اس کے بعد اس کی جوان سالہ بہن اور ماں کو تھانے بلا لیا اور پھروہی ہوا جس کے لئے پنجاب پولیس پورے ملک میں مشہور و معروف ہے ۔


تفصیلات کے مطابق تونسہ شریف کی پولیس نے ایک نوجوان جو کہ ٹانگوں سے معذور ہے اسے چوری کے الزام میں گرفتار کیا اور تھانے لے جا کر اسے شدید تشدد کا نشانہ بنایااور اس کے بعد اس کی ماں اور بہن کو تھانے لے جایا گیا اور وہاں ان سے تفتیش کے بہانے جسم کا مطالبہ کرڈالا ۔ نجی ٹی وی کے رپورٹ کے مطابق لڑکی کا کہنا تھا کہ تھانیدار نے ہمارے بھائی کو چوری کے الزام میں جیل ڈالا اور اس پر جسمانی تشدد کیا جس کے بعد جب اس سے کچھ بھی ثابت نہیں کرا سکے تو پولیس دوبارہ ہمارے گھر آگئی اور مجھے اور میری ماں کو اٹھا کر لے گئے ۔ انہوں نے جیسے ہمیں تھانے میں داخل کیا تو ہمارے اوپر ٹوٹ پڑے اور ایک پولیس والے نے بندوق میری ماں کو مارا جس سے اس کا بازو ٹوٹ گیا ۔ اس کے بعد ایک نے میرے کپڑے پھاڑ دئے اور مجھے برہنہ کر ڈالا ۔


معذور کی ماں اور اس کی بہن نے پولیس کی غنڈہ گردی کے خلاف ایف آئی آر درج کرا دی لیکن معمول کی طرح فی الحال کوئی کاروائی عمل میں نہیں آئی ۔

Comments

comments

پنجاب پولیس کی بر بریت کا ایک نیا شکار ایک معذور جوان اور اس کی ماں کے ساتھ پنجاب پولیس نے کیا کر ڈالا
Click to comment

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

To Top