Urdu

گاڑی میں‌سفر کے دوران الٹیوں‌کا علاج

یہ ایک طرح کا فوبیا ہے یہ اکثر ان لوگوں کے ساتھ پیش آتا ہے جو بہت کم سفر کرتے ہیں یا سفر کو اپنے اوپر حاوی کر لیتے ہیں ۔بچپن میں سفر کے دوران میرے ساتھ بھی ایسے ہی ہوتا تھا، بڑے ٹوٹکے آزمائے گئے تھے، لیکن جو مجھے سفر کے دوران بہتر لگے ان میں چیونگم کھانا، کتاب پڑھنا ، سڑک پر لکھے ہوئے سائن بورڈ یا دیواروں پر لکھی ہوئی تحریریں پڑھنا ، باتیں کرنا، مطلب کسی نا کسی کام میں مصروف رکھنا ہے تازی ہوا یا اےسی کا ہونا بھی ضروری ہے ۔

دراصل جب کوئی سفر کر رہاہوتاہے تو اس دوران جسم  ایک جگہ نہں ہوتا اور اس کا نچھلے دھڑ سے ایک طرح سے کنکشن ختم ہونے لگ جاتا ہے اس کی وجہ سے جسم کو طرح طرح کے پیغامات اور معلومات کے سنگنلز ملنے لگ جاتے ہیں  ،جس کی وجہ سے دماغ بھی پریشان ہوجاتا ہے ، جس کی وجہ سے الٹیوں کی کیفیت ہوتی ہے اور سر چکرانے لگ جاتا ہے ۔ اس کے ساتھ

آکسیجن کی کمی کی وجہ سے بھی الٹیاں آتی ہے پیٹرول/ ڈیزل کی ایگزاسسٹ سے دھوئیں کی شکل میں 6 مختلف قسم کی گیسوں کا اخراج ہوتا ھے جسے برداشت کرنا کچھ لوگوں کے بس کی بات نہیں۔ یہ گیس ان کے دماغ پر اثر کرتی ھیں جس سے الٹیاں آنی شروع ہو جاتی ہیں۔ اس پر گولیاں ملتی ہیں، دوران سفر ایک گولی سفر سے پہلے کھا لیں تو الٹی نہیں آئے

گی،الٹیوں سے بچنے کے لئے فورا زیادہ سے زیادہ پانی پئے ۔ اپنا دھیان باہر نہ لگائیں ۔اور اگر کسی کو سانسن کی تکلیف محسوس ہو رہی ہوتی ہے تو اس کو چاہئے کہ ایسی جگہ بیٹھے جہاں پر ہوا کی آمدورفت ہو اور روشنی آرہی ہو۔ اگر ممکن ہو تو کچھ پودینے کے پتے چبا لیں اس سے بھی الٹیان رک جاتی ہے ،۔

Comments

comments

گاڑی میں‌سفر کے دوران الٹیوں‌کا علاج
Click to comment

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

To Top